بھارتی پاکستان پر حملہ کی سازش کر رہے ہیں ۔

بھارتی میڈیا میں پیر کی شب ایک خبر لیک کی گئی ہے کہ لشکر طیبہ اور جیش محمد جموں سری نگر ہائی وے پر دہشت گردی کی منصوبہ بندی کر رہے ہیں ۔ پلوامہ میں بھارتی فوجی قافلے پر حملہ کے بعد نہ صرف بھارت نے بالا کوٹ پر حملہ کرنے کی ناکام کوشش کی بلکہ اس حملہ کی آڑ میں بھارتی انتہا پسند ہندوو جماعت کے نرنیندر مودی نے الیکشن میں دوبارہ کامیابی بھی حاصل کر لی ۔

بھارتی میڈیا میں ہیڈ لائین میں بتایا گیا ہے کہ پلوامہ میں حال ہی میں پاکستانی حمایت یافتہ دہشت گردوں کا اجلاس ہوا ہے جس میں بارود بھری کار کے زریعے جموں سری نگر ہائی وے پر کسی بھارتی فوجی قافلے یا کسی اور ہدف کو نشانہ بنایا جائے گا۔ یہاں یہ امر قابل زکر ہے کہ بھارتی مقبوضہ کشمیر میں شمالی کمانڈ کے سربراہ لیفٹنیٹ جنرل رنبیر سنگھ گزشتہ ہفتہ میڈیا سے گفتگو میں کہہ چکے ہیں کہ مقبوضہ وادی میں دو سو پاکستانی تربیت یافتہ دہشت گرد موجود ہیں جبکہ بھارتی فوج کے سربراہ جنرل راوت بھی آزاد کشمیر پر حملہ کی دھمکی دے چکے ہیں ۔

پاکستان اور بھارت کی لائین اف کنٹرول پر موجود فوجوں کی تعداد ،اسلحہ ،تربیت اور پیشہ ورانہ صلاحیت کو دیکھیں تو پاکستانی فوج کا پلڑا ہر طرح سے بھاری ہے اور کسی بھی بھارتی حملہ کو صرف ناکام ہی نہیں بنایا جا سکتا بلکہ کامیاب جوابی حملہ کی بھی صلاحیت موجود ہے لیکن بھارتی فوج کی عددی سبقت کے علاوہ پاکستانی معیشت کے عدم استحکام اور ملک کے اندر پاک فوج پر سیاسی مداخلت کے الزامات ملکی سلامتی کیلئے بہت بڑا چیلینج ہیں ۔

Facebook Comments