تحریک انصاف دو حصوں میں تقسیم ۔

وفاقی دارالحکومت میں تحریک انصاف کے متعدد اراکین قومی اسمبلی سے اتوار کے روز رابطے کئے گئے ہیں ۔ بتایا جا رہا ہے کہ شاہ محمود قریشی کی سربراہی میں ایک نیا گروپ قائم ہونا جا رہا ہے جو چنتخب کے خلاف تحریک عدم اعتماد کی صورت میں شاہ محمود قریشی کی حمایت کرے گا ۔ بتایا جا رہا ہے کہ ابتدائی بندوبست کیا جا رہا ہے اگر اپوزیشن جماعتیں نئے بندوبست پر راضی ہو گئیں تو شاہ محمود قریشی مختصر عرصے کیلئے وزیراعظم بن سکتے ہیں اور اس عرصے…

نام بڑے درشن چھوٹے ۔ محمد جاوید مرزا

17 روپے کلو والے ٹماٹر منگوانے کے لیے الہ دین ثانی حفیظ شیخ صاحب کے پرانے چراغ کو بار بار رگڑنے اور زمین پر پٹختے پر آخر کار ڈبو ایک موٹا سا پاکستانی جن نمودار ہوا ۔ انتہائئ نقاہت بھرے غصیلے لہجے میں بولا ، کیا مصیبت ھے ۔ مجھے کیوں بلایا ہے، پھر کچھ دیر توقف کے بعد خود کلامی کرتے ہوے کہنے لگا کہ ستر سال بیکار بیٹھے رہنے سے میرا وزن بڑھ گیا ھے اور مجھے شوگر بھی ہوگئی ھے براے مہربانی اب مجھے کوئی کام مت…

سب راز ہوئے فاش ۔ نذیر ڈھوکی

چیٸر مین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے ایک بار پھر سلیکٹڈ سے سوال کیا ہے کہ آپ کو امپاٸر کی انگلی پسند آٸی ، ساتھ سلیکٹرز سے بھی پوچھا ہے کہ آپ کو تبدیلی پسند آٸی ؟ ٹویٹر پیغام میں چیٸرمین پیپلز پارٹی نے کہا ہے کہ سلیکٹڈ تمہارا کھیل ختم ، نہ امپاٸر کی انگلی ، نہ جعلی تبدیلی، صرف عوام کی مرضی چلے گی . لیجٸے جناب اب تو پی ٹی آٸی کے اتحادی پرویز الہی نے بھی مان لیا ہے کہ ان کی پارٹی کو جنرل…

بند دروازے بھی کھل جاتے ہیں ۔ عبدالستار چوہدری

تبدیلی سرکار کے ساتھ حریم شاہ اور اسکی دوست کا کیا رشتہ ہے یہ تو معلوم نہیں لیکن حال ہی اہم سرکاری عمارتوں میں ویڈیوز سے شہرت پانے والی ٹک ٹاک کوئین حریم شاہ نے ایک صحافی کو انٹرویو دیتے ہوئے وہ سچ بول دیا ہے جو تحریک انصاف حکومت کی مکمل “کیمسٹری” بیان کر گیا ہے.. حریم شاہ نے سعادت حسن منٹو کے افسانوں والا کڑوا سچ ہی بولا ہے لیکن ہم بطور قوم اس کڑوے سچ کا سامنا کرنے کے لئے آج ستر سال بعد بھی تیار نہیں..…

سول ملٹری ڈیموکریسی کے نئے تجربات۔ اطہر مسعود وانی

پس پردہ رہتے ہوئے اپنے احکامات اپنی ہدایات پر حکومت کو ایک ڈاکخانے کے طور پر استعمال کرتے ہوئے ملک کو چلانے کے طریقہ کار کو بحال رکھنے کے لئے جنرل ایوب سے لیکر آج تک بہت سے تجربے کئے ہیں لیکن ملک کی بہتری کے لئے قرار دیئے گئے ان تمام تجربات کا ملک و عوام کے لئے تباہ کن ہونا ثابت شدہ امر ہے۔ ایک بار پھر صدارتی نظام،ٹیکنوکریٹ حکومت کی طرح کے مختلف آپشن یا ان کے مغلوبے کی باتیں کی جار ہی ہیں۔ پاکستان میں الیکشن…

کالی دال ۔ عمران زاہد

:ریحام خان نے اپنی کتاب میں تذکرہ کیا ہے کہ:“نومبر کے مہینے میں ایک روز میں بیڈ روم میں داخل ہوئی تو میں نے دیکھا عمران خان ایک سفید چادر پر ننگا لیٹا اپنے سارے جسم پر کالی دال مل رہا تھا یہاں تک کہ اس نے اپنی شرمگاہ پر بھی کالی دال مل لی۔ مجھے دیکھ کر کہنے لگا کہ اس کا بہنوئی احد کسی عامل کو لے کر آیا تھا جس نے بتایا ہے کہ مجھ پر کسی نے جادو کر رکھا ہے جس سے نجات پانے کے…

زندہ ہے نواز شریف زندہ ہے ۔ مطیع اللہ جان

اندھے عوام عقل کے اندھے حکمرانوں کو چھو کر جاننا چاہتے ہیں کہ ان کو سنائی دینے والے فیصلے کون کر رہا ہے۔ مگر شاید عقل کے اندھے حکمران اندھے عوام کے چھو کر جاننے اور پہچاننے کی حس سے بھی خوفزدہ ہیں۔ میڈیا پر پابندیاں اسی خوف کی علامت ہیں۔ عقل کے اندھے حکمرانوں نے تہتر سال میں ملک توڑ دیا مگر مگر عوام یا اس کے نمائندے انہیں چھو بھی نہ سکے۔ عوام اور ان کے سیاسی نمائندوں کے ساتھ کوکلا چھپاتی کھیلتی خفیہ قووتوں کو اسٹیبلشمنٹ کے…

کشمیری لڑکیوں کی عصمت دری کرنا چاہیے ۔ بھارتی جنرل

بھارتی فوج کشمیریوں کو کس نظر سے دیکھتی ہے اس کی ایک جھلک اتوار کے روز بھارتی نجی چینل کے ایک پروگرام میں سامنے ائی ہے ۔ مقبوضہ کشمیر میں تین سال تک بھارتی فوج کی کمان کرنے والے ریٹائرڈ میجر جنرل ایس پی سنہا کا کہنا تھا کہ کشمیریوں سے انتقام کیلئے انہیں قتل کرنا چاہیے اور انکی لڑکیوں کی عصمت دری کرنا چاہیے اور یہ کام بھارتی فوجی اور ہندوو نوجوان کریں ۔ پاکستانی کرتار پورہ راہدری سے بھارتیوں کو خوش کر رہے ہیں اور بھارتی جاسوس کو…

مسلم لیگ ن چنتخب سے نجات کیلئے مدد کیلئے تیار ہے ۔

مسلم لیگ ن اسٹیبلشمنٹ کو بند گلی سے نکالنے اور وزیراعظم سے تحریک عدم اعتماد کے زریعے نجات کیلئے مدد کیلئے تیار ہے ۔ بتایا جا رہا ہے کہ ن لیگ کے بعض لوگوں نے پیشکش کی ہے کہ اگر تحریک عدم اعتماد کے زریعے چنتخب سے نجات درکار ہے تو ن لیگ مدد کرے گی اور نئے وزیراعظم کو اعتماد کا ووٹ بھی دے گی تاہم یہ مدد مشروط ہو گی اور نئے الیکشن کیلئے ہوگی جو بحرحال آئندہ دو سے تین ماہ کے دوران کرانا ہونگے ۔ ن…

تبدیلی پسند آئی ؟ بلاول بھٹو

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو نے چنتتخب کے ہاتھوں زچ اسٹیبلشمنٹ سے استفسار کیا ہے “تبدیلی پسند آئی “ بلاول بھٹو نے کہا کہ جو سلیکٹڈ ہیں ان سے سوال کروں گا کہ کیا ایمپائر کی انگلی پسند آئی اور جنہوں نے سلیکٹ کیا ان سے سوال کروں گا کیا کیا تبدیلی پسند آئی ۔بلاول بھٹو نے سوال کیا کہ اس ملک میں صرف عوام کی مرضی چلے گی ۔