تحریک انصاف دو حصوں میں تقسیم ۔

وفاقی دارالحکومت میں تحریک انصاف کے متعدد اراکین قومی اسمبلی سے اتوار کے روز رابطے کئے گئے ہیں ۔ بتایا جا رہا ہے کہ شاہ محمود قریشی کی سربراہی میں ایک نیا گروپ قائم ہونا جا رہا ہے جو چنتخب کے خلاف تحریک عدم اعتماد کی صورت میں شاہ محمود قریشی کی حمایت کرے گا ۔ بتایا جا رہا ہے کہ ابتدائی بندوبست کیا جا رہا ہے اگر اپوزیشن جماعتیں نئے بندوبست پر راضی ہو گئیں تو شاہ محمود قریشی مختصر عرصے کیلئے وزیراعظم بن سکتے ہیں اور اس عرصے…

مسلم لیگ ن چنتخب سے نجات کیلئے مدد کیلئے تیار ہے ۔

مسلم لیگ ن اسٹیبلشمنٹ کو بند گلی سے نکالنے اور وزیراعظم سے تحریک عدم اعتماد کے زریعے نجات کیلئے مدد کیلئے تیار ہے ۔ بتایا جا رہا ہے کہ ن لیگ کے بعض لوگوں نے پیشکش کی ہے کہ اگر تحریک عدم اعتماد کے زریعے چنتخب سے نجات درکار ہے تو ن لیگ مدد کرے گی اور نئے وزیراعظم کو اعتماد کا ووٹ بھی دے گی تاہم یہ مدد مشروط ہو گی اور نئے الیکشن کیلئے ہوگی جو بحرحال آئندہ دو سے تین ماہ کے دوران کرانا ہونگے ۔ ن…

تبدیلی پسند آئی ؟ بلاول بھٹو

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو نے چنتتخب کے ہاتھوں زچ اسٹیبلشمنٹ سے استفسار کیا ہے “تبدیلی پسند آئی “ بلاول بھٹو نے کہا کہ جو سلیکٹڈ ہیں ان سے سوال کروں گا کہ کیا ایمپائر کی انگلی پسند آئی اور جنہوں نے سلیکٹ کیا ان سے سوال کروں گا کیا کیا تبدیلی پسند آئی ۔بلاول بھٹو نے سوال کیا کہ اس ملک میں صرف عوام کی مرضی چلے گی ۔

وائرل ویڈیو والا پونڈ پکڑا گیا ۔

ملتان میں گزشتہ ایک ماہ سے کالج کی طالبات کو تنگ کرنے اور نازیبا حرکات کرنے والا پونڈ پولیس نے گرفتار کر لیا ہے ۔ یہ شخص ہر روز کالج طالبات کی بس کا صبح اور چھٹی کے وقت اپنے موٹر سائیکل پر پیچھا کرتے اور طالبات کو نازیبا اشارے کرتا ۔ایک طالبہ نے اپنے فون سے اسکی ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر جاری کر دی جس کے بعد یہ غائب ہو گیا ملتان پولیس نے ویڈیو وائرل ہونے کے بعد مسلسل کوشش کی اور ملزم کو گرفتار کر…

نواز شریف طویل سفر کے قابل نہیں ۔

سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کی جسمانی حالت ان کے طویل سفر کی راہ میں حائل یے ۔ ماہر ڈاکٹروں کی ایک ٹیم انہیں سفر کیلئے تیار کر رہی یے ۔ بتایا جا رہا ہے کہ شریف خاندان کی طلب کردہ ائر ایمبولینس آج کسی وقت لاہور ائرپورٹ پہنچ جائے گی اور اگلے 48 گھنٹے میں سابق وزیراعظم کو لندن سفر کیلئے تیار کرنے کی کوشش کی جائے گی ۔ یہ بھی بندوبست کیا جا رہا ہے کہ ماہر طبی عملہ کے چند ارکان میاں نواز شریف کے ہمراہ جائیں…

کچھ نہیں کافی باتیں ۔ ظفر حجازی

‏تحریک انصاف میں جو نمایاں بندے نظر آتے ہیں، یہ2010 میں اس وقت کےآئی ایس آئی چیف نے ہماری جماعت سے توڑ کر تحریک انصاف میں شامل کیے۔ہم نے آرمی چیف جنرل کیانی کو گلہ کیا تو انھوں نے آئی ایس آئی چیف سے ملاقات کرائی۔ جنرل پاشا نے ہمیں عمران خان سے ملاقات کی پیشکش کی” چوہدری پرویز الہی ….. یہ ہے پاکستان کی حقیقی سیاست اور پارٹیاں بنانے اور توڑنے کے بارے میں کچھ حقائق جن سے لا علم معصوم عوام آپس میں گتھم گتھا رہتے ہیں۔ اس…

استعفی مانگ لیا گیا ہے ؟

وفاقی دارالحکومت کے اقتدار کی غلام گردشوں میں استعفے کی افواہیں گردش کرنے لگی ہیں ۔ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب راولپنڈی اور اسلام آباد میں اہم ملاقاتیں ، فیصلے اور تجاویز پر مشاورت کی اطلاعات ہیں ۔اس بات کو بھی یقینی بنایا جا رہا ہے کہ چنتخب اضطراب میں اسمبلیاں توڑنے کی ایڈوائز جاری نہ کر دے ۔اسی کوئی تجویز آنے سے پہلے ہی اس کے سدباب کے انتظامات پر بھی مشورے ہیں ۔ استعفی مانگے جانے کی افواہ اگر صیح ہے تو دینا ہی پڑے گا ۔یہ بھی…

پالتو اینکروں کا کیا بنے گا ؟

پناما ڈرامہ اپنے منطقی انجام کی طرف بڑھ رہا ہے ۔میاں نواز شریف بیرون ملک علاج کیلئے جا رہے ہیں ۔چنتخب دو روز کی چھٹی پر چلا گیا ہے ۔وزیراعظم کے ساتھ ملاقات میں آرمی چیف کی طاقت کی علامت چھڑی میز پر تھی اور باڈی لینگویج اندرونی اضطراب کا اظہار تھا ۔ پناما سے شروع ہونے والا کھیل پاکستان کیلئے ایک بھیانک خواب تھا اب اس کے کرداروں سے جواز طلب کئے جائیں گے ۔سب سے زیادہ مضحکہ خیز حالات پالتو اینکرز کے ہونگے ۔حالات اس نہج پر جا…

کرکٹر حفیظ بھی وزارت عظمی کے خواب دیکھنے لگا ،عدالتی فیصلے پر تنقید

سیاستدانوں کو یہ خبر ہے جیسے پیا چاہئے وہی سہاگن ،لیکن اب کرکٹر بھی لائین میں کھڑے ہو گئے ہیں ۔پہلے شاہد آفریدی نے وزیراعظم بن کر قومی مسائل حل کرنے کے عزم کا اظہار کیا تھا اب بلے باز حفیظ شیخ بھی پالتو اینکرز کی طرح گویا برسات میں ٹرانے لگے ہیں ۔ حفیظ نے لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ عدالتوں نے تسلیم کر لیا ہے پاکستان میں اچھے ہسپتال نہیں ۔ محمد حفیظ کی ٹویٹ پر ایک صحافی نے انہیں آئینہ…

آصف علی زرداری کیلئے بھی راستہ نکالیں ۔

مقتدر قوتوں نے چنتخب کو شٹ اپ کال دے کر سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کا علاج کیلئے بیرون ملک جانا انکی اپنی شرائط کے مطابق ممکن بنایا ہے ۔ سابق صدر آصف علی زرداری کیلئے بھی کوئی درمیانی راستہ نکالا جائے ۔میاں نواز شریف کا موقف تھا کہ سات ارب روپیہ تو دور کی بات انہیں سات روپیہ بھی ڈیل کیلئے نہیں دوں گا اور اگر مرنا ہے تو یہیں مروں گا ۔ سابق وزیراعظم کیلئے ایک درمیانی راستہ نکالا گیا اور پچاس روپیہ کے بیان حلفی پر انہیں…